حزب اسلامی افغانستان کے رکن نے برطانوی شہریت کا تاریخی مقدمہ جیت لیا

0

لندن : حزب اسلامی افغانستان کے سابق رکن نے برطانوی شہریت کا تاریخی مقدمہ جیت لیا۔

حکومت نے دہشت گردی ایکٹ کے تحت حزب اسلامی کو دہشت گرد تنظیم قرار دیا تھا جس پر برطانیہ نے حزب اسلامی کے سابق رکن کو شہریت دینے سے انکار کر دیا تھا۔

افغان شہری کی برطانوی شہریت کے لیے دی گئی 4 درخواستیں رد ہو چکی تھیں جس پر حزب اسلامی کے سابق رکن نے عدالتی نظرثانی کے لیے درخواست دی تھی۔

درخواست گزار کے وکیل عامر  منظور نے عدالت کو بتایا کہ افغان شہری نے روسی تسلط کے خلاف حزب اسلامی میں شمولیت اختیار کی تھی۔

عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا کہ افغان شہری ہونے کے سبب ہوم آفس کا شہریت سے انکار کا فیصلہ درست نہیں ہے۔

عدالت کے فیصلے کے بعد برطانیہ کی وزارت داخلہ کو افغان شہری کو کیس کی مد میں آنے والے 30 ہزار پاؤنڈ کے اخراجات بھی ادا کرنے ہوں گے۔

یاد رہے کہ برطانوی ہائیکورٹ نے ستمبر 2004 میں افغان شہری کی بطور افغان مہاجر برطانیہ میں رہنے کی درخواست منظور کی تھی۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.